ایک مرتبہ کا واقعہ ہے کہ ایک بزرگ اللہ والے جا رہے تھے

ایک مرتبہ کا واقعہ ہے کہ ایک بزرگ اللہ والے جا رہے تھے سردی کا موسم تھا بارش بھی تھی سامنے سے میاں بیوی آرہے تھے ان بزرگوں کے جوتوں سے ایک دو چھینٹیں اڑیں اور عورت کے کپڑوں پر جا گری شوہر نے جب دیکھا تو بڑا غصہ آیا کہنے لگا تو اند ھا ہے تجھے نظر نہیں آتا تو نے میری

بیوی کے کپڑے خراب کر ڈالے غصے میں آکر اس نے اللہ والے کو ایک تھپڑ لگا دیا بیوی بڑی خوش ہوئی کہنے لگی تم نے میری طرف سے خوب بدلہ لیا خوشی خوشی دونوں گھر کو چل دیے یہ اللہ والے آگے چلے گئے تھوڑی دور آ گے گئے تو کیا دیکھتے ہیں۔ کہ ایک حلوائی کی دکان ہےحلوائی نے سوچا کہ آج سردی کا موسم ہے لہٰذا آج مجھے جو اللہ کا بندہ سب سے پہلے نظر آئے گا تو میں اس کو اللہ کےلیے گرم گرم دودھ کا پیالہ ضرور پلاؤں گا اب وہ انتظار میں تھا جب بزرگ پاس سے گزرے تو اس نے بلا یا، بٹھا یا اور گرم گرم دودھ کا پیالہ پیش کیا سردی تو تھی ہی انہوں نے دودھ پیا اور اللہ کا شکر ادا کیا دوکان سے باہر نکل کر آسمان کی طرف دیکھا اور کہا واہ اللہ تیری شان کتنی عجیب ہے کہیں تو مجھے تھپڑ لگو اتا ہے کہیں گرم دودھ کے پیالے پلو اتا ہے اتنے میں وہ میاں بیوی تھپڑ مارنے والا جوڑا گھر کے قریب پہنچ چکے تھے۔ خاوند سیڑ ھیاں چڑ ھ رہا تھا اس کا پاؤں اٹکا اور وہ گردن کے بل گر ا اور وہیں اس کی موت واقع ہو گئی بیوی

نے کہا کہ تھوڑی دیر پہلے ایک واقعہ پیش آیا تھا کہیں اس بزرگ نے تو اس کے لیے بد عا نہیں کر دی لوگ ان بزرگ کے پاس آئے اور کہنے لگے ایک تھپڑ ہی تو مارا تھا آپ اسے معاف کر دیتے آپ نے اس کے لیے بد عا کر دی انہوں نے کہا تمہیں میں نے کوئی بد دعا نہیں کی میں نے صبر کیا۔ بات درحقیقت یہ ہے کہ اس کو بیوی سے محبت تھی جب بیوی کو تکلیف پہنچی تو اس نے بدلہ لیا مجھ سے میرے پروردگارکو محبت تھی جب مجھے تکلیف پہنچی تو میرے پروردگار نے بدلہ لے لیا تو جب انسان صبر سے کام لیتے ہوئے معاملہ اللہ تعالیٰ کے سپرد کر دیتا ہے تو اللہ تعالیٰ بدلہ لے لیا کر تا ہے۔ سبق: جب کبھی کوئی ہماری دل شکنی کر تا ہے یا کسی بھی قسم کا نقصان پہنچا تا ہے تو فوری طور پر ہم بدلہ لینے کے لیے خود کو تیار کر لیتے ہیں۔ اور جب ہم بدلہ لیتے ہیں چاہے اس میں کا میاب ہوں یا نہیں تو اللہ تعالیٰ کی طرف سے اس مسئلے میں کوئی مدد نہیں ملتی لیکن جب ہم صبر کا دامن تھام لیتے ہیں اور صرف اللہ پر اپنا معاملہ چھوڑ دیتے ہیں تو اللہ تعالیٰ سے مدد یقینی طور آتی ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *