چُپ کر کے ایک نیا لباس سلوا لیں اور پہننے سے پہلے یہ آیت سات بار پڑھ کر پھو نک مار دیں اور تما شہ دیکھیں۔

چپ جو بھی کر نا ہے چپ کر کے کر نا ہے یہ میں کیوں کہہ رہا ہوں اس کے پیچھے بھی کوئی وجہ ہے ایک بات ہے ایک کہانی سمجھ لیں بڑے میں وہ اس لیے کہہ رہا ہوں وہ ایسے شخصیت ہیں کہ میں نے دیکھے لوگوں کو کچھ بتا رہے ہیں اللہ تعالیٰ انشاء اللہ تعالیٰ اگر اللہ نے چا ہا تو اتنی آپ پر فراوانی دولت کی

ہو گی اتنی مہر بانی دولت کی ہو گی کہ کم نہیں رہے گی اور عمل ایک بار ہے صرف ایک بار دس دن بیس دن پچاس دن یہ عمل نہیں ہے ایک بار عمل کر نا ہے صرف ایک بار کرنا ہے یہ سمجھ لیں کہ زندگی میں ایک بار کر لینا ہے اور پوری زندگی آپ کی انشاء اللہ صحیح گزرے گی شرط کیا ہے۔ کہ میری ان باتوں کو بہت ہی زیادہ غور سے سنیے گا تا کہ اس سے بہت ہی زیادہ فائدہ حاصل ہو سکے آپ کو۔ کپڑے تو ظاہر ہے کام آ نے والی چیز ہے جب بھی آپ نیا کپڑا پہنے ایک بار صرف ایک بار سات مرتبہ ایک چیز ایک دعا صرف سات مر تبہ سات مر تبہ آپ یہ پڑ ھیں پھو نک دیں اس کے بعد ساری زندگی جب یعنی کہ جب تک وہ کپڑا آپ کے پاس جو آپ کا لباس ہے آپ نے نیا بنو ا یا ہے وہ پرانا بھی ہو جا ئے گا تو اس میں سے اثرات نہیں جا ئیں گے حتیٰ کہ انشاءا للہ تعالیٰ جہاں جہاں بھی

آپ جا ئیں گے وہ بھی ساتھ جا ئے گا لوگ انشاء اللہ کھڑے ہو کر آپ کو سلوٹ کر یں گے ۔ اتنا ہو جا ئے گا کہ آپ کو تو اللہ تعالیٰ اتنا نوازے گا کہ جس کی آپ سوچ نہیں سکتے یہاں پر کھڑے ہوں گے نا اس کا بھی نصیب انشاء اللہ چمک جا ئے گا سات مرتبہ ایک دعا بتانے لگا ہوں یہ آپ پڑھیں اور انشاءا للہ تعالیٰ اپنی آنکھوں سے اپنی آنکھوں سے آپ دیکھیں گے آپ کی غریبی پریشانی دھل جا ئے گی کوئی تکلیف نہیں ہو گی ایسی کوئی وبالِ جان بن جا ئے تکلیفیں چھوٹی موٹی تو دنیا میں آتی جا تی رہتی ہیں ایسی کوئی آپ کو تکلیف نہیں ہو گی کہ آ پ وہ برادشت ہی نہ کر سکیں۔ لوگ آپ کی تعریفیں کر نا شروع ہو جا ئیں گے بھائی یہ کھڑا ہو تا ہے تو ہمارا کام چل نکلتا ہے بہترین ہو جا تا ہے اس وجہ سے آپ کی بھی وہ عزت ہو گی لوگ کہیں گے آئیں سر آئیں آپ بیٹھیں۔ کھانا کھائیں۔ سات بار درودِ ابراہیمی اور سات بار اعوذ باللہ من الشیطان الرجیم اور سات بارہی بسم اللہ الر حمن الر حیم اور الحمد اللہ الذی کسانی ھذا ورزقینیہ من غیر حول منی ولا قوۃ اور سو بار ان اللہ علی کل شیء قدیر۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *