تربوز کے ساتھ ڈھیٹ چربی بھی پگھل کر رہے گی۔ تربوز کھانے کے فوائد۔

ربوز کو گرمی کا توڑ کرنے والا پھل کہا جائے تو بے جا نہ ہوگا، موسم گرما کا یہ خصوصي پھل نہ صرف گرمی بھگانے میں مدد فراہم کرتا ہے، بلکہ یہ ذائقہ دار پھل کئی موزی بیماریوں کو پیدا ہونے سے بھی روکتا ہے۔گرم موسم جیسے ہی اپنا رنگ دکھاتا ہےتو یہ دو رنگی پھل سب کی ضرورت بن جاتا ہے کیونکہ تربوز پانی کی

کمی پوری کرنے ميں انتہائی معاون و مددگار ہے۔تربوز کونہار منہ بہت فائدہ مند ہے لیکن اسے کھانے سے پہلے اور بعد میں پانی نہ پئیں کیونکہ اس میں 90 فیصد پانی ہوتا ہے اس لیے اگر ساتھ ہی پانی پی لیا جائے تو اس سے فوڈ پوائزننگ کا خطرہ رہتا ہے۔ عام طور پر تروبز بیج نکال کر کھایا جاتا ہے حالانکہ اس کے بیج اور چھلکے بھی انتہائی مفید ہیں۔ بیج اگر پھل کے ساتھ کھائے جائیں تو ہاضمے میں مدد دیتے ہیں۔اگر تربوز کے بیج ساتھ نہ کھائے جائیں تو انہیں نکال کر الگ سے پیسا جاسکتا ہے، انہیں دودھ میں شامل کر کے استعمال کرنا السر کے مریضوں کیلئے انتہائی مفید ہے۔رمضان کی آمد آمد ہے تو تربوز کو سحروافطار میں بھی استعمال کیا جاسکتا ہے جو پانی کی کمی کو بخوبی دور کرے گا ، اسے پسی کالی مرچ اور نمک چھڑک کر کھانا زیادہ مفید رہتا ہے۔ رات میں تربوز کھانے سے گریزبہتر ہے، اس کے مقابلے میں نہارمنہ یا دوپہر میں کھائیں۔ بہترین طریقہ یہ ہے کہ بازار سے پھل خریدنے کے بعد اسے ڈائریکٹ فریج فریزر میں رکھنے کے بجائے گھنٹہ دو گھنٹہ پانی میں ڈبو دیں تا کہ اس کی گرمی نکل جائے اس کے بعد کاٹ کرفریج میں رکھ سکتے ہیں۔کٹے ہوئے تربوز کو دن میں ہی استعمال کر لیں تو بہتر ہے کیونکہ

یہ فریج میں رکھا ہو توگیس سسٹم کے باعث نقصان دہ ہوسکتا ہے۔تربوز کھانے کے بجائے اس کا جوس بنا کر بھی پیا جا سکتا ہے، اس کے ٹکڑوں کو بلینڈ کر کے کالی مرچ، نمک اور لیموں کا رس ڈالیں۔ ذائقے کے ساتھ ساتھ افادیت میں بھی بہترین ہے کیونکہ تربوز 90 فیصد پانی پر مشتمل ہوتا ہے۔ اس لیے کبھی بھی اسے کسی دوسرے پانی والے پھل جیسے کہ خربوزے وغیرہ کے ساتھ استعمال نہ کریں۔تربوز سے لطف اندوز ہونے کے کئی طریقے ہیں ، اسے دہی اور آئس برگ میں ڈال کر کالی مرچ یا دکنی مرچ شامل کر کے کھائیں اور لطف اٹھائیں۔تربوز وٹامنزاے اور بی کا خزانہ ہے۔ اس کے چھلکے سے مزیدار سبزی بھی تیار کی جاسکتی ہے۔ کافی زیادہ مقدار میں پیاز کاٹ کر اسے ہلکا فرائی کرلیں اور پھر اس میں لہسن ادرک کا پیسٹ ، عام ہانڈی میں استعمال ہونے والے مصالحہ جات ڈال کر بھون لیں اور دم پر رکھ دیں۔ مزیدار سبزی تیار ہے۔جیسا کہ ہم سب ہی اس بات سے بہت ہی اچھے سے واقف ہیں کہ تربوز سے ہماری جو ڈھیٹ چربی ہے وہ بھی پگھل کر رہ جا تی ہے تو ہم یہ کہہ سکتے ہیں کہ یہ جو تر بوز ہے اس کی مدد سے ہم اپنی پیٹ کی چربی کو بھی کم کر سکتے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *