بدھ جمعرات اور جمعہ کا روزہ ۔ ان دنوں میں روزہ رکھنے سے کیا ملتا ہے؟

روزے رکھنا بہت بڑی عبادت ہے ۔ اللہ تعالیٰ کے محبوب کی پسند ہے میرے آقا سرورِ کائنات ﷺ رمضان المبارک کے علاوہ آقا ﷺ روزے رکھا کر تے تھے اور آقا ﷺ نے روزے رکھنے کی تر غیب بھی دلا ئی ایک صحابی رسول ِ نبی پاک ﷺ کی خدمت میں حاضر ہو ئے اور ساری زندگی روزے رکھنے کے بارے میں

سوال کیا تو آپ ﷺ نے ارشاد فر ما یا نہیں تمہارے اہلِ خانہ کا تم پر بھی حق ہے رمضان کے روزے رکھو اس کے بعد والے مہینے کے روزے اور ہر بدھ اور جمعرات کے روزے رکھا کرو تو گو یا تم نے ساری زندگی کے روزے رکھے اور افطار بھی کیا حضور کے پیا رے صحابی حضر ت سیدنا انس بن مالک ؓ فر ما تے ہیں ۔ کہ میں نے حضور ِ اکرم ﷺ کو یہ فر ما تے ہوئے سنا کہ جس نے بدھ جمعرات اور جمعہ کا روزہ رکھا اللہ اس کے لیے جنت میں موتی یا قوط کا ایک محل بنا ئے گا اور اس کے لیے جہ نم سے آزادی لکھ دی جا ئے گی اور نبی پاک ﷺ نے ارشاد فر ما یا کہ جس نے بدھ جمعرات اور جمعہ کا روزہ رکھا اللہ تعالیٰ اس کے لیے جنت میں ایک ایسا محل بنا ئے گا جس کا با ہر اندر اور اندرونی حصہ باہر سے نظر آ ئے گا اور آقا ﷺ ارشاد فر ما یا جس نے جمعرات بدھ اور جمعہ کا روزہ رکھا اس کے لیے جہ نم سے آزادی لکھ دی جا ئے گی۔ حضور نے فر ما یا کہ جس نے بدھ جمعرات جمعہ کے دن روزہ رکھا جمعہ کے دن صدقہ دیا اس کا ہر

گ ن ا ہ معاف کر دیا جا ئے گا یہاں تک کہ وہ گ ن ا ہ وں سے ایسا پاک ہو جا ئے گا جیسا کہ اس دن بنا تھا جس دن اس کی ماں نے اس کو جنا تھا تو احادیث کی روشنی میں آپ نے سماعت فر ما یا کہ بدھ جمعرات اور جمعہ کے روزے رکھنے کی کتنی فضیلت ہے۔ روزہ تزکیہ نفس کا بہترین ذریعہ ہے اس لئے اسلام نے فرض روزوں کے علاوہ مختلف ایام کے روزوں کی ترغیب بھی دی ہے‘ یہی وجہ ہے کہ انبیاء و صلحاء کی زندگیوں کا معمول تھا کہ وہ فرض روزوں کے علاوہ زندگی بھر نفلی روزوں کا بطور خاص اہتمام کرتے۔ نفلی روزوں کی فضیلت کے پیش نظر درج ذیل سطور میں بعض روزوں کی اہمیت پر روشنی ڈالی گئی ہےحضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا کہ رمضان المبارک کے بعد سب روزوں میں افضل اللہ کے مہینے محرم کے روزے ہیںحضرت ابو قتادہ انصاری رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے عاشورہ کے روزے کے متعلق پوچھا گیا تو آپ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا کہ عاشورہ کا روزہ گزشتہ سال کے گناہوں کا کفارہ ہے

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *