عید سے پہلے ایک بار لگا کر منہ دھو لو

آج ہم آپ کو جو نسخہ بتانے جارہے ہیں ہم پہلے بھی اس مرض کے نسخہ جات دے چکے ہیں۔ لوگ ہم سے آسان اور آزمودہ علاج کی فرمائش کرتے ہیں ویسے ہی ہم ان کی پریشانیوں کو دور کرنے کیلئے دن رات محنت کرکے آسان اور آزمودہ نسخہ جات انکی خدمت میں لارہے ہیں۔آج ہم آپ کو چہرے کے داغ دھبے اور چھائیوں کو

دور کرنے کا نسخہ دے رہے ہی۔ آئیے پہلے اس بیماری پر تھوڑی نظر ڈالتے ہیں بالعموم عورتوں کے چہرے پر پیریڈز کی خرابی یا معدہ کی خرابی کیوجہ سے سیاہ داغ جسے چھائیاں بھی کہتے ہیں پڑ جایا کرتے ہیںان چھائیوں وغیرہ کو دور کرنے کیلئے نفیس آزمودہ اور آسان سا نسخہ عرض کررہا ہوں۔اسکے چند دن کے مسلسل استعمال سے بضل تعالیٰ چہرے کی چھائیاں اور دانے وغیرہ دور ہوکر جلد ریشم کی مانند نکل آتی ہے ۔ سب سے پہلے تو اپنی خوراک کو متوازن کریں اور جنک فوڈز،کولڈ ڈرنکس، بیکری پروڈکٹس، تیز مصالحے والی بریانی ،چپس،نمکو اور چٹخارا دار غذائی اجزاء سے مکمل پرہیز کریں توجلدی فائدہ ہوگا۔کوئی سی بھی اچھی کمپنی کی وائٹننگ کریم لے لیں یا پھر آپ جو پہلے سے وائٹننگ کری استعمال کررہی ہیں /رہے ہیں تو اس میں ایک عد دبیٹنوویٹ این کریم شامل کرلیں ہر میڈیکل سٹور باآسان سے مل جائیگی ۔ لیکن خیال رکھیں کہ صرف بیٹنوویٹ این کریم ہی لینی ہے ایک مرہم ہوتی ہے وہ نہیں لینی صرف کریم لیں۔جیسے آپ دن میں یا رات میں کریم استعمال کرتی ہیں ویسے ہی یہ کریم استعمال کریں اور پھر رات کو سونے سے پہلے صابن سے منہ دھو کر خشک کرلیں اور رات کو بھی چہرے پر لگا کر سوجائیں صبح

اُٹھ کر صابن یا پھر فیش واش سے دھولیں۔ چند دن میں آپکا چہرہ چھائیوں اور داغ دھبوں سے صاف ہوکر چاند جیسا چمکدار ہوجائیگا۔وبصورت چہرہ اللہ سبحانہ وتعالی کی نعمتوں میں سے ایک بڑی نعمت ہے۔ایسے چہرے جو خوبصورت ہوں لوگ فطرتا ان کی طرف مائل ہوتے ہیں۔ان سے ملاقات اور گفتگو کر کے خوش ہوتے ہیں۔ان کے پاس بیٹھنا دلی سکون کا باعث بنتا ہے۔خوبصورت چہرے میں اللہ سبحانہ وتعالی نے ایسی کشش رکھی ہے کی لوگ خود بخود اسکی محبت میں مگن ہو جاتے ہیں۔دل بہانے تلاش کرتا ہے اس خوبرو کو ملنے کے۔میں ایک کتاب کے مطالعہ میں مصروف تھا تو ایک حدیث پڑھ کر چونک گیا کہ میرے پیارے نبی کیا ہی فطرت شناس تھے۔امام احمد نے فضائل الصحابہ میں ایک حدیث روایت کی ہے جسکی راویہ سیدہ عائشہ صدیقہ ام المؤمنین سلام اللہ علیھا ہیں۔آپ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا: اطلبوا الحوائج عند حسان الوجوہ۔ترجمہ۔اپنی ضرورتیں خوبصورت چہرے والوں سے طلب کرو۔خلیفہ دوئم سیدنا فاروق اعظم رضی اللہ تعالی عنہ کے بارے میں میں نے پڑھا ہے کہ آپ کبھی بدصورت اور برے نام والوں کو کام کا نہیں فرماتے تھے۔ایک دفعہ بوری اٹھوانے کے لیے راہ گیر کو آواز دی جب وہ قریب آیا تو پوچھا تیرا نام کیا ہے وہ کہنے لگا میرا نام ظالم ہے۔فرمایا باپ کا؟ کہنے لگا سارق ہے۔حضرت نے اس سے بوری نہیں اٹھوائ اور فرمایا۔جاؤ تم ظلم کرو اور تمہارا باپ چوری کرے مجھے تمہاری مدد کی ضرورت نہیں ہے۔اللہ ہم سب کا حامی وناصر ہو۔آمین

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *