آنکھیں بند کریں اور اللہ پاک کا یہ نام صرف 6دفعہ پڑھ لیں ہرمشکل مسئلہ حل

دعا کو عبادت کا مغز کہا گیا ہے۔ ہر عبادت کی طرح دعا بھی ایک عبادت ہے، جس کو ادا کرنے کے لیے کسی وقت اور جگہ کی قید نہیں ہے۔ یہ ہر جگہ اور ہر وقت کی جاسکتی ہے۔ دعا صرف اللہ سے کی جائے، یہ اللہ پاک کا حق ہے وہ کسی کو مایوس نہیں کرتا۔ کسی اور سے دعا کرنا شرک کے زمرے میں آتا ہے۔ دعا ان اہم

عبادات میں سے ہے جن کا اللہ تعالیٰ نے اپنے بندوں کو حکم دیا ہے۔ اس نے اس کی قبولیت کا وعدہ کیا ہے اور اس سے اعراض کرنے والوں کو وعید سنائی ہے۔اللہ تعالیٰ کے ارشاد کا مفہوم ہے: تمہارے رب نے کہا: تم مجھ سے دعا کرو، میں تمہاری دعا قبول کروں گا۔ یقین مانو! جو لوگ میری عبادت سے خود سری کرتے ہیں، وہ ابھی ذلیل ہو کر جہنم میں پہنچ جائیں گے۔اللہ کے رسولؐ کا فرمان ہے: تمہارا پروردگار باحیا اور سخی ہے، جب اس کا بندہ اس کی جانب دونوں ہاتھوں کو اٹھاتا ہے تو اللہ تعالیٰ کو اس بات سے حیا آتی ہے کہ انہیں خالی ہاتھ لوٹائے۔دعا عبودیت کی علامت ہے۔ اس کے وسیلے سے بندہ اللہ کی توجہ طلب کرتا اور اس سے مدد اور رحمت حاصل کرتا ہے۔ اس کے ذریعے وہ اپنی حاجت کی درخواست اور بے بسی کا اظہار کرتا ہے۔ غیر اللہ کی طاقت و قوت سے برأت کا اظہار کرتا ہے۔ چنانچہ ہمیں قرآن مجید کے آغاز میں بھی دعا ملے گی اور اختتام میں بھی۔ سورۃ فاتحہ میں بندہ اللہ تعالیٰ کی تعریف کے ساتھ اس کے سامنے اپنی درخواست پیش کرتا ہے۔ اسی طرح معوذتین میں بھی وہ اللہ کی پناہ طلب کرتا ہے۔ فضیلت ِ دعا کے بارے میں نبی کریم ﷺ کا ارشاد ہے: دعا سراسر عبادت ہے۔دعا، اللہ تعالیٰ کے نزدیک تمام چیزوں سے بہتر

ہے۔ حضرت ابوہریرہؓ کی روایت ہے کہ نبی کریمؐ نے فرمایا: ’’ کوئی چیز اللہ تعالیٰ کے نزدیک دعا سے بہتر نہیں ہے۔دعا سے مسلمانوں کے باہمی تعلقات استوار ہوتے ہیں۔ ارشادِ باری تعالیٰ کا مفہوم ہے: اور جو ان کے بعد آئیں وہ کہیں گے کہ اے ہمارے پروردگار ہمیں بخش دے اور ہمارے ان بھائیوں کو بھی جو ہم سے پہلے ایمان لا چکے ہیں۔نبی کریم ﷺ نے ارشاد فرمایا: وہ چیزیں جو م رنے کے بعد میت سے منقطع نہیں ہوتیں، ان میں ایک دعا بھی ہے۔دعا ایسی عبادت ہے، جس کے لیے نہ کوئی وقت متعین ہے، نہ حالت۔ انسان کسی بھی وقت بلند آواز سے یا آہستہ، سفر، حضر، صحت، مرض غرض کسی بھی حالت میں دعا کر سکتا ہے۔ سختی، آزمائش اور مصیبت کے ازالے کے لیے دعا کا اہتمام کرنا چاہیے۔ حضرت ابراہیم ؑ نے وطن سے ہجرت کرتے وقت فرمایا تھا: میں اپنے پروردگار سے دعا مانگ کر محروم نہیں رہوں گا۔حضرت زکریاؑ نے فرمایا تھا: کبھی بھی تجھ سے دعا کر کے محروم نہیں رہا۔اللہ تعالیٰ کا ایک اسم مبارک اپنی آنکھیں بند کرکے صرف چھ مرتبہ پڑھ لیں انشاء اللہ پورے یقین کیساتھ پڑھیں آپ کا ہر مشکل مسئلہ حل ہوجائیگا ۔ دنیا کی بڑی سے بڑی حاجت پوری ہوجائیگی ۔ آنکھیں بند کراللہ تعالیٰ کے اسم مبارک البدیعُ کو چھ مرتبہ پڑھنا ہے ۔اگر پورے یقین کیساتھ اللہ تعالیٰ کی ذات پر یقین رکھتے ہوئے اس عمل کو کرتے ہیں انشاء اللہ یہ کرلیں دنیا کا ہر مقصد ہر حاجت پوری ہوجائیگی اپنی آنکھوں سے معجزہ دیکھ کر حیران رہ جائیں گے ۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *