روزہ کی حالت میں نیوز چینل دیکھنا کیسا ہے؟ روزہ کی حالت میں گانے سننا ٹی وی دیکھنا ۔۔؟

ٹی وی دیکھنا چوں کہ کئی گ ن ا ہ وں کا مجموعہ ہے جس کی وجہ سے عام حالات میں بھی شرعاً جائز نہیں، چاہے کسی بھی نوعیت کا پروگرام ہی کیوں نہ ہو، اور روزے کی حالت میں اس کے گناہ میں مزید شدت آجاتی ہے، لہذا اس گ ن ا ہ سے اجتناب نہایت ضروری ہے۔ تاہم اس کی وجہ سے روزہ نہیں ٹوٹتا،

لیکن ثواب میں کمی کا سبب ہے، بعض روایات سے معلوم ہوتاہے کہ جس طرح بعض جگہوں (مثلاً حرم) اور بعض اوقات (مثلاً رمضان) میں نیکیوں کا ثواب بڑھ جاتاہے اسی طرح ان جگہوں اور اوقات میں گناہ کی شدت بھی بڑھ جاتی ہے؛ لہٰذا گناہوں سے روزے کی حفاظت از بس ضروری ہے۔ موسیقی تو ہرحالت میں سننا حرام ہے چاہے وہ رمضان میں ہو یا عام حالت میں ، لیکن اتنا ہے کہ رمضان المبارک میں تو اس کی حرمت اورشدید ہوجاتی ہے اورگناہ بھی بڑھ جاتا ہے ، کیونکہ روزے کامقصد یہ نہيں کہ صرف کھانے پینے سے رکا جائے ، بلکہ اس کا مقصد تو یہ ہے کہ اللہ تعالی کا تقوی اختیار کیا جائے اور روزہ میں اعضاء کا روزہ یہ ہے کہ وہ اللہ تعالی کی معصیت سے اجتناب کریں اللہ سبحانہ وتعالی

کا فرمان ہے اے ایمان والو ! تم پر روزے رکھنے فرض کیے گئے ہیں جس طرح کہ تم سے پہلے لوگوں پر فرض کیے گۓ تھے۔ ، تا کہ تم تقوی اختیار کرو اورنبی مکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کھانے پینے سے رکنے کا نام روزہ نہيں ، بلکہ روزہ تو لغواوربرے کاموں اورباتوں سے بچنے کا نام ہے ) اسے امام حاکم نے روایت کیا اوراسے مسلم کی شرط پر قرار دیا ہے مسلمانوں اور روزے دار پر واجب ہے کہ وہ اللہ تعالی سے ڈرے اور اس کا تقوی اختیار کرتے ہوئےجو کچھ وہ سب اوقات میں کر رہا اور چھوڑ رہا ہے اس میں اللہ تعالی سے ڈرے اور اللہ تعالی کی حرام کردہ اشیاء سے بچے اور وہ بے ہودہ فلمیں جن میں ایسی چیزیں ظاہر ہوتی ہیں جو کہ اللہ تعالی نے حرام کی ہیں مثلا بالکل اور کچھ ننگی تصویریں اور غلط قسم کے جملے اور کلامت وغیرہ ۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *