دانتوں میں درد ۔ کیڑا لگنا۔ کھوکھلے دانت۔ بس ایک چٹکی دانت پر لگالیں۔ دانتوں کے سبھی مسئلے بالکل ٹھیک۔

آج میں بات کرنے والی ہوں دانتوں سے متعلق مسئلوں کے بارے میں دانتوں میں درد کا ہو نا دانتوں میں کھو کھلا پن آ جا نا دانتوں میں کیڑا لگ جا نا یہ تمام پرابلمز آج کل بہت زیاد ہو رہے ہیں آج کل سبھی لوگ کھانا کھاتے ہیں اور رات کو کھانا کھانے کے بعد

برش کیے بغیر سو جا تے ہیں اس وجہ سے جو کھانے کی جو بیکٹیر یا ہو تے ہیں وہ آپ کے دانتوں میں جمع ہو جا تے ہیں اور پھر دانتوں میں آہستہ آہستہ درد ہو نا شروع ہو جا تا ہے یہ وہ نسخہ ہے جو ہم لوگوں کے بڑے استعمال کر تے آئیں گے جو بزرگ لوگ تھے ان کے دانت بہت مضبوط ہوتے تھے اور بالکل یہ کیڑوں سے کھوکھلے پن سے دردوں سے پاک ہو تے تھے تو جس طرح پہلے زمانے میں درد کی کوئی پرابلم نہیں تھی۔ کیونکہ وہ گھر یلو اگر خدانخواستہ مسئلہ ہو تا تھا وہ گھر یلو چیزوں کا استعمال کر تے تھے تو آج انہی کا بتا یا ہوا ایک گھر یلو نسخہ بتا رہی ہوں آپ کے دانتوں کا درد ٹھیک ہو جا ئے گا اور جو کھو کھلا پن ہے وہ بھی آہستہ آہستہ بھر نا شروع ہو جا ئے گا بہت ہی آسان چیزیں آپ کو چاہییں ہیں ا س کے لیے جو پہلی چیز آپ کو چاہیے وہ ہے لہسن لہسن کوشش کیجئے کہ دیسی ہو نا چاہیے لہسن کے آپ تقریباً تین کلیاں لے لو اور ان کو اچھے سے چھیل کر باریک کاٹ لو باریک باریک کاٹ لو تو زیادہ بہتر رہے گا اگر میش کرو گے تو اس کا جوس نکل جا ئے گا۔ ہمیں اس کا جوس بھی چاہیے صرف ا س کا کھو کھلا پن

نہیں چاہیے بس اس کو کاٹو اور باؤل میں ڈالو دوسری چیز جو ہمیں چاہیے وہ ہے نمک جسے کا لا نمک بھی کہتے ہیں لیکن آپ نے سادہ نمک نہیں لینا آپ نے پتھر والا نمک لینا ہےا ور اس باؤل میں دو سے تین چٹکی کالا نمک شامل کر لو ۔ آپ کو پتہ ہے نا کہ تقریباً ہر ٹوتھ پیسٹ میں نمک کی مقدار ضرور موجود ہو تی ہے جو آپ کے دانتوں کی صفائی کے لیے بہت ہی زیادہ مفید ہے تو اسی طرح اب تیسری چیز جو ہمیں چاہیے وہ ہے آئل آپ سرسوں کا تیل لے لیں جی ہاں سر سوں کا تیل اب آپ نے پہلے تو لہسن کو اور نمک کو اچھے سے مکس کر لینا ہے۔ مکس کرنے کے بعد جس دانت میں آپ کے درد ہے تو ایک چٹکی اپنے دانتوں میں لگا لو اس کو لگانے کےبعد آپ کے منہ میں پانی آ ئے گا اس پانی کو آپ نے پھینکنا نہیں ہے کوشش کرو کہ آپ اپنے منہ کو دو تین منٹ کے لیے بند رکھو اس پیسٹ کو لگانے کے بعد دو تین منٹ کے لیے منہ کو بند رکھئے اور آپ دیکھو گے کہ تین سے چار بار اس کے استعمال سے آپ کو پتہ لگے گا کہ آپ کے دانت کا درد مکمل ٹھیک ہو جا ئے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *