صرف دو گھنٹے میں بال خشکی اور خارش سے پاک صاف

ناظرین سردینوں کا موسم شروع ہوتے ہی خواتین، مردوں کے سر کے بالوں میں خشکی سکری پیدا ہو جاتی ہے جس کی وجہ سے سر میں خارش آ تی رہتی ہے۔ بال کمزور ہو جاتے ہیں۔ اکثر لوگ سر کے بال سردیو ں میں بہت زیادہ گرتے ہیں۔ سردیوں کے موسم میں بالوں کا گر نا۔ بالوں کا سفید ہونا۔ بالوں کا کمزور ہو نا۔ بالوں میں خشکی سکری پیدا ہو جاتی

ہے۔ جس سے لوگ خواہ وہ مرد ہوں اور خواہ وہ عورتیں ہیں۔ یہ مسئلہ بہت ہی زیادہ بڑھ چکا ہے۔لیکن ایک بڑی وجہ یہ بھی ہے کہ ہم لوگ سردیوں میں گرم پانی سے غسل کرتے ہیں۔گرم پانی سےغسل کرنے کی وجہ سے بال کمزور ہو جاتے ہیں۔ خشکی پیدا ہو جاتی ہے بالوں میں اور خشکی کے ساتھ ساتھ سکری بھی پیدا ہو جا تی ہے۔ اب ظاہر ہی سی بات ہے کہ سردی میں ٹھنڈے پانی سے نہیں نہائے گا۔ ہر آ دمی پانی گرم کر کے ہی نہاتے ہیں۔ اگر آپ چاہتے ہیں کہ گرم پانی سے غسل کر نے کے باوجود آپ کےسر کے بال متاثر نہ ہوں ۔ سر کے بالوں میں خشکی پیدا نہ ہو۔ سر کے بال کمزور نہ ہوں اور بال خوب صورت بھی رہیں تو آج میں جو بات بتانے لگا ہوں۔ صرف ایک ہفتہ سر پر روزانہ لگا نا ہے تو اس کے رزلٹس دیکھ کر کر انشاء اللہ آپ خوش ہو جائیں گے۔ نسخہ بتانے سے پہلے ایک درخواست ہے آپ لوگوں سے کہ میری بات کو بغور سنیئے گا۔ تو چلیے بڑھتے ہیں نسخے کی طرف۔ ناظرین بالوں کی خشکی ، سکری اور بالوں کو مضبوط بنانے کے لیے جو

نسخہ ہمیں چاہیے اس کے اجزاء کچھ اس طرح سے ہیں۔ آپ نے اپنے گھر پر ایک پیسٹ بنانا ہوگا۔ پیسٹ بنا نے کے لیے آپ کو کچھ چیزوں کی ضرورت ہو گی۔ اجزاء کے نام ہیں۔ نمبر ایک۔ میتھی دانا۔ نمبر دو۔ ناریل کا تیل۔ نمبر تین۔ لیموں۔ نمبر چار پر بیکنگ سوڈا۔ یہ چیزیں لینے کے بعد آپ نے ان کا ایک پیسٹ بنا نا ہوگا۔ پیسٹ بنانے کے لیے ایک کپ میتھی دانا دو کپ گرم پانی میں رات کو بھگو کر جو ہے رکھ دیں۔ صبح اٹھ کر پانی کو گرینڈر مشین میں ڈال کر گرینڈ کر لیں تو یہ حلوہ نما ایک پیسٹ بن جائے گا۔ اس پیسٹ میں چار چمچ ناریل کا تیل ، آدھا لیموں اور آدھے چائے کا چمچ بیکنگ سوڈا ملا کر آپ کا پیسٹ بالکل تیار ہو جائے گا۔ اس پیسٹ کو برش کی مدد سے بالوں کی جڑوں میں لگا نا ہے۔ پیسٹ لگانے سے پہلے بالوں کو دھو کر خشک کر لیں اور بر ش کی مدد سے اس پیسٹ کوبالوں کی جڑوں میں لگائیں۔ اسے تیس منٹ تک بالوں میں لگا ئے رکھیں اور پھر اس کے بعد دھو لیں۔ بالوں کو دھوتے وقت ایک بات کا خاص خیال رکھنا ہے کہ کوئی شیمپو یا صابن نہیں لگانا۔ صرف پانی سے دھو کر خشک کر لیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.