امام علیؑ نے فرمایا اولاد کیلئے ایک وظیفہ

اللہ تعالیٰ قرآن میں فرماتا ہے کئی لوگوں کو میں اولاد دے کر آزماتا ہوں اور کئی لوگوں کو بغیر دیئے آزماتا ہے ۔ ہر شادی شدہ جوڑے کی خواہش ہوتی ہے کہ اس کی نیک اور صالح اولاد ہو جن کی نہیں ہوتی وہ دوائیوں پر بے تہاشہ پیسا ضائع کردیتے ہیں۔ آج ایک ایسا مجرب وظیفہ لیکر حاضر ہوئے ہیں جس کے کرنے سے

اللہ تعالیٰ کے حکم سے آپ کے ہاں نیک اور صالح اولاد ہوگی ۔ یہ عمل حضرت علی ؓ نے بتایا ہے ایک دفعہ ایک شخص حضرت علی ؓ کے پاس آیا اے علی ؓ میرے ہاں اولاد نہیں کافی عرصے سے میں بے اولاد ہوں مجھے کوئی ایسا عمل بتائیں جس کے کرنے سے اللہ تعالیٰ مجھے نیک اور صالح اولاد عطاء فرمائے تو حضرت علی ؓ نے جو عمل بتایا وہ آج بتائیں گے ۔ یہ عمل قرآن پاک کی سب سے مختصر سورۃ الکوثر پر مشتمل ہے ۔ جوقرآن پاک کے تیسویں پارے میں مشتمل ہے ۔حضرت علی ؓ نے فرمایا کہ جب تم کبھی حلال روزی کماکر آئے ہو اور اس کا کھانا کھانے لگو تو سورۃ الکوثر پڑھ کر اس پر دم کردو اور اللہ کے حضور دعا کرو نیک وصالح اولاد کیلئے پھر اس کھانے کو کھالو اس کے علاوہ ہر نماز کے بعد 21مرتبہ سورۃ الکوثر کا ورد کرو اور اللہ کے حضور دعا مانگو اللہ تعالیٰ تمہیں نیک وصالح اولاد نصیب کرے گا۔ عمل آپ نے جب بھی کھانا کھانے لگیں تب کرلیں پانچ وقت کی نماز باقاعدگی سے پڑھیں۔ ہر نماز کے بعد کریں کوشش کریں میاں بیوی دونوں یہ عمل کریں اگر دونوں نہیں کرسکتے ہیں تو شوہر لازمی کرے تاکہ اللہ تعالیٰ نیک اور صالح اولاد نصیب فرمائے ۔

آپ لوگوں نے بلکل پختہ یقین کیساتھ اس عمل کو کرنا ہے انشاء اللہ رب کے حکم سے نیک اور صالح اولاد نصیب ہوگی ۔اگر ہزاربار اول وآخر درود شریف گیارہ گیارہ بار پڑھا کرے اس نیت سے کہ حضورﷺ کی زیارت نصیب ہو تو انشاء اللہ تعالیٰ زیارت فیض بشارت سے کامیاب ہوگا ۔ نزول باراں رحمت کے وقت ایک سو بار پڑھیں جو دعا مانگے قبول ہوگی ۔ اگر کسی دشمن نے گھر میں جادو دفن کر دیا ہو، اس سورۃ کا ورد کرنے سے جادو دفن کر نے کی جگہ معلوم ہوجائیگی اور جادو کا اثر دور ہو جائے گا۔ وظیفہ یا عمل پورے یقین سے کریں ، شک عمل کو ضائع کر دیتا ہے ، پوری توجہ کے ساتھ وظیفہ پڑھا جائے اور دعا پورے دل اور خشوع و خضوع سے مانگیں ، رزق حلال کا اہتمام کریں ، حرام غذا عمل کے اثر کو ختم کر دیتی ہے ، ہر عمل اللہ کی رضا کیلئے کریں ، مالک راضی ہوگا تو کام بنے گا۔ ان افراد کے وظائف اور عمل بے اثر رہتے ہیں جو نماز اور دیگر فرائض ادا نہیں کرتے ۔ حرام کاموں سے بچیں ، حرام کاموں سے روحانیت کو نقصان پہنچتا ہے تب عمل اثر نہیں کرتا ۔ الفاظ کی تصیح کا اہتمام کر یں الفاظ غلط پڑھنے سے معنی بدل جاتے ہیں ، صفائی اور پاکیزگی کا اہتمام کریں

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.