خطے میں بھی کشیدگی کا خدشہ، پاکستا ن کے متعلق اہم پیشگوئی کردی گئی

معروف ستارہ شناس پروفیسر غنی جاوید نے انکشاف کیا ہے کہ 11 فروری کو 5 سیارے اکٹھے ہوجائیں گے جن میں سورج ، عطارد ، زہرہ ، مشتری اور زحل شامل ہیں ، ان کے اکٹھا ہونے کے نتیجے میں دنیا میں ایک بار پھر ج ن گ کے آثار پیدا ہوں گے ، نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ سیارے اس سے پہلے 1962میں اکٹھے ہوئے ، جب یہ

اکٹھے ہوئے اس وقت ہندوستان کے تمام پنڈتوں نے شور مچادیا کہ ان کے اکٹھے ہونے کی وجہ سے قیامت آرہی ہے ، اس سے پہلے جب یہ آئے تو ان کے آنے کے بعد 1965کی ج ن گ آئی اور اس کے بعد 1971آگیا ، اس لیے دوبارہ ان کے اکٹھا ہونے سے ایک بار پھر سنگین صورتحال بنتی نظر آرہی ہے۔اس دوران اینکر پرسن سمیع ابراہیم نے بتایا کہ اس سے پہلے جب یہ سیارے اکٹھے ہوئے تو اس وقت ر و س اور ام ریک ہ کے درمیان کشیدگی پیدا ہوگئی تھی جس کے نتیجے میں م یز ائ ل ح، ملوں کا خدشہ پیدا ہوگیا تھا جوکہ بنیادی طور پر کی وبا اور امریکہ کے تنازع سے شروع ہوا لیکن اس کی وجہ سے ایک عال می ج ن گ چھڑ نے کا اندیشہ پیدا ہوگیا تھا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *