جب مرد یہ کام کرتے مجھے اچھا لگتا

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) راہ چلتے خواتین کو چھیڑنا بداخلاقی کی انتہاء ہے اور ہر خاتون اس سے بیزار بھی ہوتی ہو گی تاہم اب ایک آسٹریلوی خاتون نے اس حوالے سے ایسا شرمناک اعتراف کیا ہے کہ سن کر آدمی دنگ رہ جائے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق 36سالہ جینا ہاکنگ نامی اس

خاتون کا کہنا ہے کہ جب مرد اسے دیکھ کر سیٹی بجاتے اور چھیڑتے ہیں تو اسے بہت اچھا لگتا ہے اور وہ اس سے لطف اندوز ہوتی ہے۔ جینا ہاکنگ کا کہنا تھا کہ ”میں جانتی ہوں کہ راہ چلتے ہوئے مردوں کی طرف سے چھیڑا جانا اکثر خواتین کو ناگوار گزرتا ہے مگر میرے ساتھ یہ معاملہ مختلف ہے۔ میرے خیال میں کسی مرد کا خاتون کو چھیڑنا دراصل خاتون کے لیے ایک کمپلیمنٹ ہوتا ہے۔ اس طریقے سے وہ مرد خاتون کی تعریف کر رہا ہوتا ہے۔ چنانچہ میرے نزدیک مرد کا یہ عمل خاتون کے لیے ناگواریت کا سبب نہیں ہونا چاہیے۔“ جینا ہاکنگ نامی اس خاتون کا کہنا ہے کہ جب مرد اسے دیکھ کر سیٹی بجاتے اور چھیڑتے ہیں تو اسے بہت اچھا لگتا ہے اور وہ اس سے لطف اندوز ہوتی ہے۔ میرے خیال میں کسی مرد کا خاتون کو چھیڑنا دراصل خاتون کے لیے ایک کمپلیمنٹ ہوتا ہے۔ اس طریقے سے وہ مرد خا تون کی تعریف کر رہا ہوتا ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.