انٹرنیٹ نے مجھے برباد کیا میری یہ عادت مجھے

اسلام آباد(ٹونٹی فور سیون ڈیلی نیوز پوائنٹ) میرا تعلق سعودی عرب سے ہے مگر میں اپنے شہر کا نام یا اپنا نام نہیں بتائوں گی. مجھے آپ اپنی بہن سمجھ لیں . میری ایک سہیلی نے مجھے اپنے گھر آنے کی دعوت دی میری وہ سہیلی ان لوگوں میں سے ہے جو انٹرنیٹ کا بکثرت استعمال کرتے ہیں.اس نے میرے دل میں

اس دنیا کو دیکھنے،اسے جاننے اور استعمال کرنے میں رغبت و شوق کو خوب بھڑکا دیا.اس نے مجھے تقریباَ 2ماہ میں ہی یہ سب کچھ سکھلا دیا کہ انٹرنیٹ کو کیسے استعمال کرنا ہے؟اب میرے شوق کا یہ عالم ہوگیا کہ میں بکثرت استعمال اس کے گھر جانے لگی تھی.میں نےاس سے چیٹنگ کرنا سیکھ لیا،میں نے یہ بھی سیکھ گئی کہ کمپوٹر کو کیسے کھولنا اور انٹرنیٹ میں کیسے داخل ہونا ہے ان 2 ماہ کے دوران میری اپنے شوہر سے ہر وقت جنگ ہر وقت جنگ چھڑی رہتی کہ وہ گھر میں انٹرنیٹ لگوائے لیکن وہ اس چیز کے خلاف تھا. یہاں تک میں نے اسے یہ کہہ کر قائل کر لیا کہ تمہارے کام پر چلے جانے کے بعد میں بہت تنہائی محسوس کرتی اور سخت اکتاہت میں مبتلا رہتی ہوں خصوصاَ جب ہم گھر والوں سے بھی دور ہیں.میں نے دلیل یہ دی کہ میری تمام سہیلیوں کے پاس انٹرنیٹ کنکشن ہے وہ اسے استعمال کرتی ہیں میں کیوں نہ استعمال کروں اور ان سے گپ شب نہ کروں جب کہ وہ ٹیلیفون سے بہت سستا ہے.آخرکار میرشوہر قائل و رضامند ہوگیا مگر کاش کہ نہ ہوا ہوتا.میں نے روزانہ اپنی سہیلیوں سے چیٹنگ کرنا شروع کردیا اس کے بعد میرے شوہر کو

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.