لوہے کو لوہے سے کاٹنے کا فیصلہ! پی ڈی ایم کے جلسے، عمران خان نے کیا احکامات جاری کر دیئے؟ بڑی خبر

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) وفاقی حکومت نے پی ڈی ایم کے ریاست مخالف بیانیئے کیخلاف حکمت عملی طے کرلی، وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مذاکرات کرسکتے ہیں لیکن احتساب پر سمجھوتہ نہیں ہوگا، عوام پاک فوج سے پیار کرتی ہے، ریاستی اداروں پر تمام حملوں کو کو ناکام بنائیں گے۔ تفصیلات کے مطابق

وزیر اعظم عمران خان کی زیرصدارت پارٹی و حکومتی ترجمانوں کا اجلاس ہوا۔اجلاس میں مہنگائی ، اپوزیشن کے بیانیئے اور قومی سلامتی کے حوالے سے مشاورت کی گئی۔ ایاز صادق کے بیان پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ پارٹی ترجمانوں نے ایاز صادق کے خلاف قانونی کاروائی کرنے کا مطالبہ کیا۔ اپوزیشن کے ریاست مخالف بیانیئے کو کاؤنٹر کرنے کیلئے ایک حکمت عملی بھی طے کی گئی۔وزیراعظم نے ہدایت کی ایاز صادق کے بیان کو عوامی سطح پر اٹھایا جائے۔عوام پاک فوج سے پیار کرتی ہے۔پی ڈی ایم بھارت کے ایجنڈے پر کام کررہی ہے۔اپوزیشن کے ریاستی اداروں پر تمام حملوں کو کو ناکام بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم کی قیادت کو ہرفورم پر جواب دیا جائے گا۔ اپوزیشن اور پاکستان کے مفادات الگ ہیں، اپوزیشن کی کرپشن ہر سطح پر بے نقاب کی جائے۔حکومت مذاکرات پر یقین رکھتی ہے مگر احتساب پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔احتساب جمہوریت کا واحد جزو ہے، اپوزیشن کا بیانیہ قائداعظم اور اقبال کا نہیں ہے۔ عمران خان نے کہا کہ مہنگائی کے خاتمے پر پوری توجہ دے رہا ہوں۔حکومت کے فلاحی اقدامات سے عوام کو آگاہ کیا جائے۔ اسی طرح وفاقی وزیر اطلاعا ت ونشر یات سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ پی ڈی ایم کی قیادت یہ نہ سمجھے کہ ایاز صادق کے بیان کی بات پس منظر میں چلی جائیگی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام گوجرانوالہ، کوئٹہ جلسوں کے ملک دشمن بیانیے اور مزار قائد کی بے حرمتی کا حساب چاہتے ہیں۔ ان کی قومی اِداروں کیخلاف زہرپھیلا کردشمن کو خوش کرنے کی مذموم کوشش کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.