اچھا تو یہ بات تھی ۔۔۔!!!شاہ محمود قریشی کی آجکل ٹانگیں کیوں کانپ رہی ہیں ؟ بڑا پول کھول دیا گیا

لاہور(ویب ڈیسک)پاکستان مسلم لیگ ن پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے کہا ہے کہ پاکستان کو بطور ریاست ایاز صادق نےنہیں فواد چوہدری کے بیان نے نقصان پہنچایا ،عمران خان یا شاہ محمود قریشی کا نام ریاست نہیں، ان جیسے کئی لوگ آتے جاتے رہتے ہیں،محمد زبیر نےآرمی چیف یا فوجی قیادت سے نہ ملنے کے

لئے کوئی حلف نہیں اٹھایا ہوا ،مجھے بتا دیجئے کہ ریاست کو شاہ محمود قریشی کی ٹانگیں کانپنے سے کیا نقصان ہوا ؟۔نجی ٹی وی “سما نیوز ” کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے عظمیٰ بخاری نے کہا کہ ایاز صادق اگر صرف باڈی لینگویج پر بات کریں اور وہ کہیں کہ شاہ محمود قریشی گھبرائے ہوئے تھے تو اس میں ریاست کو کیا نقصان ہوا ہے؟اب ظاہر ہے کہ اگر جنگ کی بات ہو رہی ہے تو خوشیاں اور مٹھائیاں بانٹنے والی بات تو نہیں ہے،ایسے حالات کسی بھی ملک کے لئے انتہائی سنجیدگی کے متقاضی ہوتے ہیں کیونکہ جنگ کوئی اچھا آپشن نہیں ہوتا ،کشمیر کا جب واقعہ ہوا پانچ اگست والا اس کے بعد مظفر آباد میں بیٹھ کر 14 اگست کو شاہ محمود قریشی نے کھل کر کہا کہ جنگ کوئی آپشن نہیں ہے ہمارے لئے اور ہمیشہ ان کا یہی موقف رہا ہے،یقینا مہذب ملکوں کے لئے جنگ آپشن نہیں ہونی چاہئے لیکن آپ پر اگر جنگ تھوپ دی جائے تو پھر حکومتیں یا فوجیں نہیں اس جنگ کو قومیں لڑا کرتی ہیں ۔عظمیٰ بخاری نے کہا کہ ایاز صادق نے شاہ محمود قریشی کے بارے میں بات کی تھی یہ تو نہیں کہا کہ پاکستان ڈر گیا تھا ؟پلوامہ کے بارے تو ریاست پاکستان کا یہ موقف رہا ہے کہ اس سے ہمارا کوئی لینا دینا نہیں ،ایف اے ٹی ایف پر ہم پہلے ہی مشکلات میں ہیں ،بھارت نے کہہ دیا ہے کہ فروری میں وہ فواد چوہدری کے بیان کو فیٹف میں لے کر جائیں گے،مجھے یہ بتائیے کہ پاکستان کو نقصان کس کے بیان سے ہوا ؟کیا شاہ محمود قریشی اور عمران خان کی شان میں گستاخی سے پاکستان کو نقصان ہو گیا ؟یا فواد چوہدری کے بیان نے پاکستان کو نقصان پہنچایا ہے؟

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.