ن لیگ میں بھنگڑے، نواز شریف کو بڑی خوشخبری سنا دی گئی

لندن: لندن پولیس نے سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کیخلاف خلاف شکایت کو ناقابل کاروائی قرار دے دیا۔ میٹروپولیٹن پولیس نے کہا کہ نوازشریف کے ساتھ 6 افراد کے جمع ہونے کی شکایت پر کاروائی نہیں کی جارہی، اگر شکایت میں کوئی قابل گرفت عمل پایا جاتا تو ضرور کاروائی کی جاتی۔میڈیارپورٹس کے مطابق سابق وزیر اعظم نوازشریف کی

جانب سے لاک ڈاؤن قوانین کی مبینہ خلاف ورزی پر لندن پولیس نے 13 اکتوبر کو ایک شہری کی شکایت پر اس حوالے سے تفصیلات مانگی تھیں۔ سماجی رابطے کے ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک صارف بلیو آن بلیو نے گزشتہ روز ایک ویڈیو شیئر کی تھی جس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کچھ دیگر افراد کے ساتھ ہائیڈ پارک میں واک کر رہے تھے۔ اس ویڈیو پر ریڈئینٹ (RadiantSez) نے میٹروپولیٹن پولیس کی توجہ دلائی اور ساتھ لکھا کہ یہ لوگ 6 افراد کے اصول اور ماسک کی پابندی کی خلاف ورزی کر رہے ہیں۔اس پر میٹروپولیٹن پولیس نے نوٹس لیتے ہوئے مذکورہ صارف سے کہا کہ وہ براہ راست پیغام بھیج کر انہیں تفصیلات مہیا کریں۔ شریف خاندان کے ذرائع کے مطابق نواز شریف جب ہائیڈ پارک میں چہل قدمی کے لیے گئے تو ان کے ساتھ صرف پانچ مزید افراد تھے، برطانوی حکومت کی کوویڈ گائیڈ لائنز کے تحت 6 افراد قانونی طور پر ایک جگہ جمع ہو سکتے ہیں۔ لیکن آج لندن پولیس نے سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کیخلاف خلاف شکایت کو ناقابل کاروائی قرار دے دیا ہے۔ ایون فیلڈ ہائیڈ پارک میں 6 سے زیادہ افراد کے جمع ہونے کی شکایت پر کاروائی نہیں کی جارہی۔اگر شکایت میں کوئی قابل گرفت عمل پایا جاتا تو ضرور کاروائی کی جاتی۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.