مریم کا آئین اور جمہوریت سے رشتہ ایسے ہے جیسے صفدر اور فوج کا ہے۔۔۔!!! فواد چوہدری نے مریم نواز کو چھٹی کا دودھ یاد دلا دیا

لاہور(ویب ڈیسک) وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ اپوزیشن کی تحریک کاغذ کی کشتی کی طرح بہہ جائے گی، مریم کا آئین اور جمہوریت سے رشتہ ایسے ہے جیسے صفدر اور فوج کا ہے، مریم نواز کا جمہوریت سے کوئی تعلق نہیں۔ انہوں نے مریم نواز کی تقریر پر ردعمل دیتے ہوئے

کہا کہ نوازشریف اور بیٹے لندن سے واپس کیوں نہیں آرہے؟ عوام کا مطالبہ یہ ہے کہ لوٹے پیسے واپس کرو، اپوزیشن کی تحریک کاغذ کی کشتی کی طرح بہہ جائے گی۔مریم نواز کا جمہوریت سے کوئی تعلق نہیں، مریم نواز کرپشن بچانے کیلئے تحریک چلا رہی ہیں۔ آئین اور جمہوریت سے مریم کا رشتہ ایسے ہے جیسے کیپٹن رصفدر اور فوج کا ہے۔ یاد رہے آج واضح رہے مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے پارٹی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نوازشریف کی قیادت میں ہم فیصلہ کن تحریک میں داخل ہونے جا رہے ہیں۔ارکان اسمبلی اور کارکنان نے قائد کے ساتھ کھڑے ہوئے۔میاں نواز شریف نے جو بیانیہ دیا ہے، ووٹ کو عزت دو کا بیانیہ ہے، میاں نوازشریف اور میں ہم دونوں نااہل ہیں، لیکن نوازشریف عوام کا مقدمہ لڑ رہے ہیں، انتخابی حلقوں میں جو دھاندلی ہوئی وہ تین ماہ قبل شروع ہوگئی تھی۔پاکستان کی ہر بیماری کاعلاج ووٹ کو عزت دو نعرے میں ہے۔نوازشریف جب کہتے ہیں جس باکس میں جس کے نام کا ووٹ ڈالا جائے اسی کا نکلنا چاہیے تو پھر غداری کے مقدمے بنتے ہیں۔یہ کیسا غدار ہے،جس نے 6ایٹمی دھماکے کرکے پاکستان کا دفاع مضبوط کیا، جو جےء ایف 17تھنڈر بنا گیا، موٹروے بناگیا، ضرورت پڑنے پر جنگی جہاز لینڈ اور ٹیک آف کرسکتے ہیں، جب اقتدار میں آیا تو پاکستان ہر گلی میں بارود کی بوآتی تھی، کیسا غدار ہے جس نے اپنے سر پر ضرب عضب اور ردالفساد کیا، کہتے فوج پیچھے تھی ، یہ درست ہے لیکن آگے نوازشریف کھڑا تھا، نوازشریف نے یہ نہیں کہا کہ ہم پیسے نہیں دے سکتے، لیکن حکومت کا پیٹ کا کاٹ کر پیسا دیا۔یہ کیسا غدار ہے جس نے ملک کو روشنیاں دیں۔انہوں نے کہا کہ بڑا افسوس ہوا کہ جب عدالت نے فیصلہ دیا کہ نوازشریف کے اشتہار لگائے جائیں، لیکن جب اشتہار لگائیں گے تو اس میں شکل جنرل پرویز مشرف کی نظرآئے گی ، جس عدالت نے آرٹیکل 6کا فیصلہ دیا اس کو عدالت کو صفحہ ہستی سے مٹا دیا گیا۔وہ ملک، 22کروڑ عوام اورآئین کو مکے دکھا کر چلا گیا، لیکن کسی عدالت ، جج میں جرات نہیں ہوئی کہ واپس لانے کیلئے للکار سکے۔نیب نے کہا ہم ڈھول بجائیں گے ڈھول میں سے آواز شوکت صدیقی کی گواہی، عاصم سلیم باجوہ کے پیزے کے کاروبارکی آئے گی، جج ارشد کے کیس کی آئے گی، قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ سرینا لاٹھی لے کر ایف بی آر کے باہر کھڑی ہو کر انتظار کرتی ہیں۔لیکن عاصم سلیم باجوہ کی بیوی کو کسی میں پوچھنے کی جرات نہیں ۔ نوازشریف کی آواز گلی محلوں میں پہنچانے کا میڈیا، بیانیے کا کردار تو ہے لیکن میاں نوازشریف پر ظلم نے سب سے زیادہ کردار ادا کیا۔نوازشریف نے کارکنان کو اکیلا نہیں چھوڑا، بلکہ پہلے خود سینے پر وار سہے، پھر ہمیں آگے کیا۔نوازشریف نے مجھے کہا کہ گرفتاری کیلئے بیگ تیار کرلو،گھبرانا نہیں، جب اس طرح کے ہتھکنڈے شروع ہوجائیں تو سمجھ حکومت کے دن تھوڑے رہ گئے ہیں۔ وعدہ کرو پاکستان، عوام ، ووٹ کی عزت اور نوازشریف کے نظریے کا سر نہیں جھکنے دو گے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *