نواز شریف کی اتنی بیماریاں بتائی گئیں کہ شیریں مزاری بھی رو پڑیں اور میرے آگے کیا درخواست کر دی ؟ وزیر اعظم عمران خان کا ناقابل یقین بیان

اسلام آباد (ویب ڈیسک)وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ کابینہ کو نوازشریف کی اتنی بیماریاں بتائی گئیں کہ شیریں مزاری تک کی آنکھ میں آنسو آگئے۔عمران خان نے وکلاسے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے ایک وزیر کا بھائی ان کا ترجمان بنا ہے، اس نے نوازشریف کو خمینی سے ملادیا، جبکہ خمینی کو بندوق کی

نوک پر بھیجا گیا تھا، اس نے بیماریاں بتا کر منتیں نہیں کی تھیں۔وزیراعظم نے اپوزیشن پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ سارے بے روزگار سیاست دان اکٹھے ہوگئے، یہ سارے خود کو قانون سے بالا سمجھتے ہیں۔انصاف لائرز فورم کے زیر اہتمام تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ لندن میں بیٹھا شخص لوگوں سے کہہ رہا ہے کہ وہ اس کی چوری بچانے کے لیے باہر نکلیں۔ یہ جتنے مرضی جلسے کر لیں اگر قانون توڑا تو یہ جیل میں ہوں گے، انہیں این ار او ملا تو ملک تباہی کی طرف جائے گا۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاک فوج کے خلاف غلط زبان استعمال کرنے والے ہندوستان کا ایجنڈا لے کر پھر رہے ہیں۔جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وفاقی اور صوبائی حکومت نے احتجاجی جلسوں کے دوران مریم نواز کو گرفتار نہ کرنے کا عندیہ دے دیا، وزیراعلیٰ پنجاب اور وفاقی وزراء نے اتفاق کیا گیا کہ اپوزیشن کو احتجاج کیلئے فری ہینڈ دیا جائے، کسی غیرجمہوری اقدام بجائے حکومتی بیانیئے سے اپوزیشن کو بےنقاب کیا جائے۔ تفصیلات کے مطابق وزیر اعلی عثمان بزدار ے وفاقی وزراء شاہ محمود قریشی، اسد عمر، شفقت محمود، فواد چودھری، چیف وہپ قومی اسمبلی ملک عامر ڈوگر اور شہزاد اکبر نے ملاقات کی۔ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آئی ہے کہ اپوزیشن کو احتجاجی سرگرمیوں کیلئے اجازت کے معاملے پر مشاورت کی گئی۔ پنجاب اور وفاقی حکومتی شخصیات نے اپوزیشن کو فری ہینڈ دینے کی تجویزدی ہے۔کچھ شخصیات کی کورونا خدشات کے باعث جلسوں سے گریز کی تجویز بھی دی گئی ہے۔ یہ تجویز بھی دی گئی کہ احتجاجی جلسوں کے دوران مریم نواز کی گرفتاری عمل میں نہ لائی جائے۔اتفاق کیا گیا کہ اپوزیشن کے احتجاج سے نمٹنے کیلئے کوئی غیرجمہوری اقدام نہیں اٹھایا جائے گا۔ اپنا بیانیہ اجاگر کرکے اپوزیشن کو بےنقاب کیا جائے۔ حکومتی پریس ریلیز کے مطابق وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار سے آج وزیر اعلی آفس میں وفاقی وزراء شاہ محمود قریشی، اسد عمر، شفقت محمود، فواد چوہدری، چیف وہپ قومی اسمبلی ملک عامر ڈوگراور مشیر برائے وزیر اعظم شہزاد اکبرنے ملاقات کی جس میں پنجاب میں عوام کی فلاح و بہبود کیلئے جاری سکیموں اور ترقیاتی منصوبوں پر تبادلہ خیال کیا گیا اور ترقیاتی منصوبوں پر ہونے والی پیشرفت پر بھی بات چیت کی گئی- وزیر اعلی عثمان بزدار نے کہا کہ پنجاب کے ہر شہر، قصبے اور دیہات کی یکساں ترقی کے لئے پائیدار عملی اقدامات کئے گئے ہیں۔کوئی بھی شہر یا قصبہ ترقی کے ثمرات سے محروم نہیں رہے گااور اختیارات کو نچلی سطح تک منتقل کیا جائے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *