بغاوت کے مقدمے کا بہت بڑا فائدہ ہوگا

’بغاوت کے مقدمے کا نوازشریف کو بہت بڑا فائدہ ہوگا ، عمران خان کی جڑ کاٹ دی‘

اگر سابق وزیراعظم کو وطن واپس لانے کا کسی بھی قسم کا چانس تھا تو وہ اس مقدمے کے بعد ختم ہوگیا ، ایف آئی آر کے ذریعے عمران خان کے پاؤں پر کلہاڑا مارا گیا ، اینکر پرسن عمران ریاض خان

اسلام آباد ( 06 اکتوبر2020ء) سابق وزیراعظم نوازشریف کے خلاف درج کیے گئے بغاوت کے مقدمے کا انہیں بہت بڑا فائدہ ہوگا،ایف آئی آر کٹوانے والوں نے وزیراعظم عمران خان کے پاؤں پر کلہاڑا مارا، اب نوازشریف کی وطن واپسی کو کوئی چانس نہیں رہا ، ان خیالات کا اظہار اینکر پرسن عمران ریاض خان نے کیا۔ اپنے یوٹیوب چینل پر گفتگو میں انہوں نے کہا کہ بغاوت کے مقدمے کیلئے درج کی گئی ایف آئی آر نوازشریف کے بہت کام آئے گی ، سابق وزیراعظم اب برطانیہ ، بین الاقوامی اداروں، اور انسانی حقوق کی تنظیموں کو یہ ایف آئی آر دکھائیں گے کہ مجھے واپس نہ بھیجیں کیوں کہ میرے خلاف یہ سب دو نمبری ہورہی ہے، مقدمے مین نامزد دفعات جب نوازشریف وہاں پیش کریں گے تو اس کا انہیں فائدہ ہوگا، جس کے بعد انہیں پاکستان واپس لانا مزید مشکل ہوجائے گا، اگر کسی بھی قسم کا کوئی چانس تھا تو وہ اس مقدمے کے بعد ختم ہوگیا، مسلم لیگ ن کو اس کا صرف ایک صورت میں ہی نقصان ہوتا اگر اس مقدمے میں نامزد افراد کو گرفتار کرلیا جاتا، اور انہیں جیلوں میں ڈال دیا جاتا لیکن یہ تو نہیں ہوگا ۔

اینکر پرسن کے مطابق یہ ایف آئی آر وزیراعظم عمران خان کے قریبی لوگوں نے حکومت پنجاب کے ساتھ مل کر کاٹی ہے ، جس کے ذریعے انہوں نے عمران خان کے پاؤں پر کلہاڑا مارا، وزیراعظم عمران خان کو اس ایف آئی آر کے بارے میں معلوم نہیں تھا ، وہ اس طرح کی ایف آئی آر کاٹنے کے خلاف ہیں، عمران خان نوازشریف کو پاکستان واپس لانا چاہتے ہیں ، سابق وزیراعظم یورپ کو یہ کہہ رہے ہیں کہ ان کے اوپر دائر مقدمات سیاسی نوعیت کے ہیں، جب کہ عمران خان کا کہنا ہے کہ یہ مقدمات قانونی نوعیت کے ہیں نوازشریف کو واپس بھیجیں، تاکہ وہ آکر اپنے مقدمات کو سامنا کریں، جس کسی نے بھی بغاوت کا مقدمہ درج کروانے کا کام کیا، اس نے عمران خان کی جڑ کاٹی ہے، کیوں کہ اس ایف آئی آر کے بعد نوازشریف کے پاس ثبوت موجود ہے کہ ان پر ایک سیاسی مقدمہ ہوگیا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *