نواز شریف مطلوب ہیں۔۔!! عدالت نے اخبارات میں اشتہار دینے کرنے کا حکم جاری کر دیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق وزیراعظم نواز شریف کو بذریعہ اشتہار طلب کرنے کا حکم دے دیا ہے۔تفصیلات کے مطابق نواز شریف کے ناقابل سماعت وارنٹ گرفتاری کے عدالتی احکامات پر عمل درآمد کیس پر سماعت ہوئی جس میں اسلام آباد ہائیکورٹ نے نواز شریف کے اشتہار جاری کرنے کا حکم

دے دیا۔ عدالت نے العزیزیہ اور ایوان فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کو بذریعہ اشتہار طلب کر لیا ہے۔اسلام آباد ہائیکورٹ نے وزارت خارجہ کے افسر مبشر خان کا بیان ریکارڈ کیا۔نواز شریف کو اشتہاری قرار دینے کے لیے 3 گواہوں کی شہادتیں قلمبند کیے گئے۔نیب نے نواز شریف کو اشتہاری قرار دینےت کی استدعا کر دی۔نیب کا کہنا ہیں کہ شہادتیں ریکارڈ ہو گئیں۔نواز شریف جان بوجھ کر عدالت سے مفرور ہیں۔ نواز شریف عدالت کو مطلوب ہیں اخبارات میں اشتہار دیا جائے۔نواز شریف کے مطلوب ہونے کا اشتہار رہائش گاہ پر چسپاں کروائے۔انگریزی اردو اخبارات میں نواز شریف کے مطلوب ہونے کا اشتہار دیا جائے۔جن اخبارات کی اشعات برطانیہ سے ہوتی ہے ان اخبارات کو حکم دیا جائے۔خیال رہے کہ العزیزیہ اور ایون فیلڈ ریفرنس میں نوازشریف کی اپیلوں پر گزشتہ سماعت کا تحریری حکم نامہ جاری کردیا گیاتھا جس کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ نے نواز شریف کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز کردیا ۔عدالت نے کہاکہ دفتر خارجہ کے ڈائریکٹر محمد مبشر خان، قونصل اتاشی عبدالحنان کا بیان اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا حصہ ہوگا۔ عدالت نے کہاکہ پاکستانی ہائی کمیشن لندن کو ویڈیو لنک کے زریعے بیان ریکارڈ کرنے کے لیے اس آرڈر سے آگاہ کیا جائے۔حکم نامہ میں کہاگیاکہ ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے بتایا نواز شریف کے وارنٹس کی تعمیل کی کوشش کی کامیابی نہیں ہوئی، ان حالات میں نوازشریف کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز کر رہے ہیں۔عدالت نے کہاکہ وارنٹس کی تعمیل کے لئے جانے والے افسران کے بیانات سات اکتوبر کو ریکارڈ ہوں گے۔حکم نامے میں کہاگیاکہ ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے بتایا کہ رائل میل کے ذریعے وارنٹس بھیجے گئے، رائل میل کی مصدقہ آن لائن رسید آئندہ سماعت پر جمع کرائی جائے ۔اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بنچ نے گزشتہ سماعت کا تحریری حکم نامہ جاری کیا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *