پی ڈیم ایم میں پھو کا آغاز! جمعیت علماء اسلام نے نواز شریف کو ’آستین کا سانپ ‘ قرار دے دیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) جمعیت علماء اسلام ف کے اہم رہنما حافظ حسین احمد نے سابق وزیراعظم نوازشریف کو آستین کا سانپ کہہ دیا، انہوں نے کہا کہ میں اس ملک کا رہنے والا ہوں، یہ ملک ہے تو ہم ہیں، ہم یہ سمجھتے ہیں کہ ہر چیز کی ایک ریڈ لائن ہوتی ہے،

ایک حد ہوتی ہے، ہم یقیناً اس وقت اس مقام پر پہنچ چکے ہیں کہ سابق وزیراعظم نے وہ حد کراس کرلی۔نجی ٹی وی چینل کے ایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے حافظ حسین احمد نے کہا کہ ماضی میں جب پہلے نوازشریف لندن میں بیٹھے تھے، جس وقت قاضی حسین احمد بھی اس وقت زندہ تھے، اس وقت وزیراعظم عمران خان کو بھی بلایا گیا جو اس وقت صرف تحریک انصاف کے چیئرمین تھے اور طے پایا کہ پریز مشرف کی حکومت کے زیر نگرانی الیکشن کا بائیکاٹ کیا جائے گا، باقی تمام جماعتوں کو نوازشریف نے بائیکاٹ پر لگادیا، جس کے بعد فوری طور پر نوازشریف نے اپنا موقف بدل لیا۔دوسری طرف پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے سربراہ اور جے یو آئی ف کے امیر مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ایاز صادق نے انتہائی ذمے دارانہ اور سنجیدہ بات کی ہے، ملک کو آئین کےمطابق چلایا جائے ، ناجائزحکومت ہم پر مسلط نہ کی جائے، جس کی کابینہ احمقوں کا مربہ ہے ، تفصیلات کے مطابق سابق اسپیکر قومی اسمبلی سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو میں پی ڈی ایم سربراہ نے کہا کہ حکومت اپوزیشن کو اشتعال دلاتی ہے، اور ملک میں بحران پیدا کیے جارہےہیں، میرے خیال میں قیامت کی علامت ہے کہ مسلم لیگی غدار ٹھہرے ، ہم توہین آمیز رویوں کےخلاف ہیں، لیکن تنقید سے کوئی بالا تر نہیں ہے، ہم حکومت کے جواز کو تسلیم نہیں کرتے ، اس بات کا حق نہیں دے سکتے کہ ان سے حب الوطنی کا سرٹیفکیٹ بھی لیتے رہیں، اختلاف رائے اصولوں پر کرتے ہیں اور کرتے رہیں گے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.